ٹیلی فون پر پوچھئے
اگر آپ قرآن سے متعلق اپنے کسی سوال کا جواب ڈاکٹر قمر زمان صاحب سے براہ راست پوچھنا چاہیں تو اس فون نمبر پر رابطہ کیجئے:
+92 333 4901214
Every Saturday at
10.00 AM to 05.00 PM (PST)


کتابیں
سلسلہ دعوت قرآنی کے پلیٹ فارم سے شائع شدہ کتب و مضامین ابلاغ قرآن کے مقصد کو پیش نظر رکھ کر پیش کی جا تی ہیں ۔ مؤقف سے اختلاف آپ کا حق ہے مگر یہ اختلا ف خالص قرآنی ہونا چاہئے۔ مثبت تنقید ہمارے لئے باعث حصول علم ہوگی۔
سلسلہ دعوت قرآنی نہ تو کسی فرقے سے متعلق ہے اور نہ ہی کسی شخصیت یا اس کے افکار کی تعلیم کا نام ہے۔ اگر آپ نے بھی قرآن پر کوئی تحقیق کی ہو اور اس کو دوسروں تک پہنچانا چاہیں تو ہمارے صفحات آپ کے لئے حاضر ہیں۔
سلسلہ دعوت قرآنی کی طباعت شدہ کتب و مضامین ان قارئیں کے لئے جو انٹر نیٹ کی سہولت سے استفادہ نہیں کر سکتے بلا معاوضہ دستیاب ہیں اور پاکستان بھر میں مفت ارسال کی جا سکتی ہیں۔
حدیث کے نام پر دھوکہ کیوں ؟ تحریر و تحقیق   ڈاکٹر قمر زمان

اشاعت اوّل:1997 ,1

ترمیم:2001 ,1
قرآن کو خالص قرآنی معانی و مفاہیم کے تحت سمجھنے اور مسلم امت کو واپس قرآن کی طرف لانے کے لیے سلسلہ دعوت قرآنی نے دو کتابچے شائع کئے تھے جن کے نام ’’حقیقت حدیث‘‘ اور ’’سرچشمہ ہدایت صرف القرآن ‘‘تھے۔ ڈاکٹر مفتی عبدالواحد صاحب نے ان کتابوں پر اپنی تنقید ’’حدیث رسول سے عداوت کیوں‘‘ میں فرمائی ہے۔
کتاب حدیث کے نام پر دھوکہ کیوں ؟ دراصل مفتی صاحب کے اس کتابچے کا جواب ہے جس میں انہوں نے ان لغویات اور جھوٹی روایات کو سچ ثابت کرنے کی کوشش کی ہے۔
اس کتاب میں محترم مفتی ڈاکٹر عبدالواحد صاحب کا کتابچہ ’’ حدیث رسول سے عداوت کیوں؟ ‘‘ بھی من و عن شامل ہے۔ تاکہ احباب کو کتابچہ ڈھونڈنے میں دشواری نہ ہو اور نہ صرف یہ کہ آپکو بھی معلوم ہو جائے کے بخاری اور مسلم کی کہانیوں کو سچا ثابت کرنے میں علماء جو دلائل پیش کرتے ہیں ان میں کتنا وزن ہے بلکہ آپ کو یہ فیصلہ کرنے میں بھی آسانی ہو جائے کہ کیا سچ ہے اور کیا جھوٹ ہے۔
View Previous
Read & Download This Book
Move Next
اس کتاب کے مطالعہ کے لئے آپ کے کمپیوٹر میں ایڈوب ریڈر کی موجودگی ضروری ہے۔ اگر آپ کے کمپیوٹر میں ایڈوب ریڈر انسٹال نہیں ہے تو آپ اس سافٹ ویر کو فری انسٹال کر سکتے
سوال و جواب   
اگر آپ اس کتاب ”حدیث کے نام پر دھوکہ کیوں ؟“ سے متعلق کوئی سوال پوچھنا چاہیں یا اپنی رائے دینا چاہیں تو آستانہ بلاگ کے صفحات آپ کے لئے حاضر ہیں۔ کوشش کیجئے کہ سوال مختصر اور موضوع سے متعلق ہو۔ آپکی طرف سے پوچھے گئے سوالات یا مثبت اعترازات ہمارے اور دیگر پڑہنے والوں کے لئے سوچ کی نئی راہیں کھولتے ہیں جن سے سیکھنے کے مزید مواقع ملتے ہیں۔سوال پوچھنے کے لئے یہاں کلک کریں....
حدیث کے نام پر دھوکہ کیوں ؟
سے متعلق اب تک پوچھے گئے سوالات اور ان سے متعلق آستانہ بلاگ کے ممبرز کی رائے.....
Members pls explain Quran 5:51! Do not take the Jews and the Christians for friends; they are friends of each other; and whoever amongst you takes them for a friend, then surely he is one of them; surely Allah does not guide the unjust people By: Saeed on 5/22/2011
Salam o Rehmat Dear Brothers and Dr Sahab Please share your views about Hazrat Maryam(R) .and explanation of ayat 4/34. waseemameer@engineer.com Waseem By: waseemameer on 5/14/2011
Peace upon u all. according to Arabic grammar ASSALAM U ALEKUM is to greet more than 2 people as u know 2 is not plural in arabic its rather TASNIAH, which means 2, so how come plural greetings to a single or 2 persons? By: hameedkhattak on 12/27/2010
Dear All, Please Tell me about S Moses and his stick turning to a snake . tell me about the story in detail. Explain it to me as im 2 years old, so nothing is missed out. (im a bit slow:(:)) By: Nargis2 on 11/4/2010
dear qamar zaman i have just readbook hadith ka nam par dhoka in which at the end you write that the suras and every thing of quran was arranged by the prophet himself.and since his age quran is in the book form.plz give proof.God bles u By: bilal_khan5181 on 6/24/2010
Sir, can you prove the wording mentioned on page # 21before the Heading of "AAhadees ke Purane Nuskhein" By: Adnan Khan on 3/9/2010
Salam I could open this book.Please give me guidance. By: Rehan_Khan on 1/19/2010
SA: I cannot read or download "Hadith Key Nam pe Dhoka Kiyoun?" The link is inactive, please correct it. By: dawood on 1/5/2010
 فہرست کتب 
 احباب کو بھیجئے 
اگر آپ یہ صفحہ اپنے احباب کو بذریعہ ای میل بھیجنا چاہیں تو
یہاں کلک کریں.....
  کیا آپ کو معلوم ہے ؟
کتب احادیث
تفاسیر
سیرت رسول
تاریخ
ادب جاہلیہ
سب کے سب دوسری صدی ہجری کے بعد میں وجود میں آئی ہیں
سوچئے اور غور کیجئے ۔۔۔۔۔۔کہ
کیا ان دو صدیوں تک اسلامی ریاستوں میں کوئی علمی تحریری کام نہیں کیا گیا؟
کیا اسلامی ریاستوں کی عدالتوں نے تمام فیصلے زبانی کلامی جاری کئے؟
کیا تمام جنگوں میں محاذ پر احکامات بھی زبانی کلامی بھیجے گئے؟
یا
ان دو صدیوں کا تمام تر تحریری ریکارڈ کسی سازش کے تحت ضائع کیا گیا اور اس کی جگہ وہ مواد لایا گیا جو آج نہ صرف دین بن گیا ھے بلکہ جس کی وجہ سے قرآن کو بھی پس پشت ڈال دیا گیا ہے۔

       HOME  BOOKS  ARTICLES  ABOUT US  AIM AASTANABLOG    
 AASTANA.COM © 2005-2010
NEWS LETTER: TELL A FRIEND: BOOKMARK THIS SITE: CONTACT US: